یہ ہے بھارت سرکار، زیر حراست شہید کر دیا، تین دن بعد مقدمہ درج

مقبوضہ کشمیر میں دوران حراست شہید کئے جانے والے سکول کے پرنسپل کے خلاف مقامی پولیس نے موت کے دو دن بعد ایک مقدمہ درج کر لیا.
باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق اونتی پٔورہ پولیس سٹیشن میں رضوان کے بھاگنے کا مقدمہ درج کر لیا حالانکہ یہ مقدمہ درج ہونے سے تین دن پہلے شہید کر دیا گیا تھا
واضح رہے کہ قبوضہ کشمیر میں بھارتی تحقیقاتی ادارے این آئی اے نے سرینگر میں جماعت اسلامی کے ایک کارکن اور سکول کے پرنسپل کودوران حراست تشدد کرکے شہید کردیا تھا۔ 28سالہ رضوان اسد کو این آئی اے کے اہلکاروں نے تین دن پہلے ضلع پلوامہ کے علاقے اونتی پورہ میں ان کے گھر سے گرفتارکرکے بھارتی پولیس کے سپیشل آپریشن گروپ کے بدنام زمانہ انٹروگیشن سینٹر کارگو کیمپ میں شہید کیا۔

Comments
Loading...