ایم کیو ایم منی لانڈرنگ کیس، عدالت ایف آئی اے پر برہم

دالت کو آج ایف آئی اے کی درخواستوں پر حکم نامہ جاری کرنا تھا جو ایف آئی اے کی ٹیم کے پیش نہ ہونے کی وجہ سے جاری نہیں ہو سکا.

ایم کیوایم اور خدمت خلق فاونڈیشن کے نام پر منی لانڈرنگ کیس کی سماعت میں عدالت نے ایف آئی اے ٹیم کے پیش نہ ہونے پر برہمی کا اظہار کیا ہے.

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق ایم کیوایم اور خدمت خلق فاونڈیشن کے نام پر منی لانڈرنگ کیس کی سماعت میں عدالت نے ایف آئی اے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے ایف آئی اے ایڈیشنل ڈائریکٹر بختیار چنہ، اعجاز شیخ اور محمد رئیس سے 19 اپریل کو جواب طلب کر لیا. عدالت نے کہا کہ اہم ترین کیس میں ایف آئی اے نے غفلت اور لاپرواہی کی مثال قائم کردی، عدالت کو آج ایف آئی اے کی درخواستوں پر حکم نامہ جاری کرنا تھا جو ایف آئی اے کی ٹیم کے پیش نہ ہونے کی وجہ سے جاری نہیں ہو سکا. ایف آئی اے نےکچھ بینکوں ،ایم کیوایم دفاتر پر چھاپوں کی اجازت کی درخواست کر رکھی ہے .وارنٹ گرفتاری جاری ہونے کے باوجود ایف آئی اے نے کسی ایم کیوایم رہنماکو تاحال گرفتار نہیں کیا .عدالت نے ایم کیوایم بانی، رہنما طارق میر، ندیم نصرت ،خواجہ سہیل منصور، ریحان منصور اور بابر غوری کے وارنٹ گرفتاری جاری کررکھے ہیں

Comments
Loading...