چھوٹا طیارہ اڑانے کے جرم میں گرفتار نوجوان رہا

عدالت نے تین ہزار روپے جرمانہ کرنے کے بعد رہا کردیا ہے ۔

چھوٹا طیارہ اڑانے کے جرام میں گرفتار نوجوان کو عدالت نے رہا کر دیا

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پاکپتن کے نوجوان کو چھوٹا طیارہ تیار کرنے کے بعد اڑانے کی کوشش میں گرفتار کر لیا گیا تھاجسے عدالت نے تین ہزار روپے جرمانہ کرنے کے بعد رہا کردیا ہے ۔

پاکپتن کے رہائشی فیاض کو پولیس نے خود ساختہ چھوٹا اڑاتے ہوئے گرفتار کیا تھا جسے آج ہی مقامی عدالت میں پیش کیا گیا جہاں عدالت نے ملزم کو تین ہزار روپے جرمانے کی سزا دی تھی ۔ جرمانے کی ادائیگی کے فوری بعد فیاض کو رہا کر دیا گیا ۔

اے ایس آئی پاکپتن کی مدعیت میں درج مقدمہ کا متن ہے کہ جہاز بغیر پرمٹ کے بنایا گیا۔ نوجوان نے جہاز پر خطرناک کرتب بھی دکھائے، پولیس پہنچی تو جہاز لینڈ کررہا تھا۔پولیس کے مطابق ملزم نے 500 سے 600 لوگوں کے مجمعے میں سنگین انداز میں کرتب دکھائے۔ تاہم کو ئی حادثہ پیش نہیں آیا۔ پولیس نے محمد فیاض سے جہاز اڑانے کا پرمٹ طلب کیا ۔لیکن کو پولیس کو حکومت پاکستان کا اجازت نامہ فراہم نہیں کر سکا۔ ایف آئی آر کے مطابق نوجوان کو منی جہاز اور دیگر سامان سمیت تھانے منتقل کردیا ہے اور قانون کے مطابق کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ملزم کے خلاف دائر مقدمے میں 285، 286 اور 287 کی دفعات شامل کی گئی ہیں۔

Comments
Loading...