لاہور نیازی اڈا سے بیگ سے ملنے والی لاش کا معاملہ حل ہوگیا، تیز دھار آلے سے قتل کیا گیا۔

نیازی اڈا سے بیگ سے ملنے والی نعش کا معمہ حل ہوگیا۔ سی سی ٹی وی کے زریعے شواہد حاصل کر لیئے گئے۔ نیازی اڈا بیگ سے ملنے والی واردات کے بعد قاتل بیگ میں نعش ڈال کر ٹھکانے لگانے جارہا ہے۔

کچھ عرصہ قبل ہی نیازی بس اڈا کے قریب لاوارث بیگ پڑا دیکھ کر مقامی افراد نے پولیس کو اطلاع کی جس پر پولیس نے موقع پر پہنچ کر بیگ کو کھولا تو اس کے اندر خون میں لت پت 25سالہ نامعلوم نوجوان کی لاش برآمد ہوئی جس پر پولیس نے فرانزک ٹیم سے رابطہ کیا۔ اور پھر لاش کو پورسٹمارٹم کے لیے منتقل کر دیا گیا پولیس کے مطابق نامعلوم ملزمان نے مقتول کے سینے پر تیز دھار آلے سے وار کر کے قتل کیا اور بعد میں اس کی لاش بیگ میں ڈال کر نیازی اڈے کے قریب پھینک کر فرار ہو گئے اس حوالے سے بہت عرصے سے علاقے کے تمام سی سی ٹی وی فوٹیج نکلوائی جا رہی ہیں تاکہ ملزمان کی شناخت ممکن ہو سکے اس کے علاوہ مقتول کے شناخت کی بھی کوشش کی جا رہی تھی۔ اب کچھ عرصے بعد جرم کرنے والا منظر عام پر آیا ۔ 20سالہ وجاہت خلیل کا قاتل ڈاکٹر حنان نکلا۔

قاتل ڈاکٹر حنان نے وجاہت خلیل کو عید کے روز کے اپنے فلیٹ پر بلایا۔نشہ آور چیز کھلانے کے بعد وجاہت کو تیز دھار آلہ سے قتل کر دیا۔

قتل کے بعد قاتل ڈاکٹر نے اپنا حلیہ تبدیل کر لیا۔ چالاک قاتل نے سرمنڈا کر پولیس کو چکمہ دینے کی کوشش کی. وجاہت کے قتل میں مزید لوگ ملوث ہوسکتے ہیں۔ یہ وجاہت کے والد کا بیان تھا۔ وجاہت اور ڈاکٹر جنان اپس میں دوست تھے۔ مقتول کی موٹر سائیکل قاتل کے فلیٹ سے برآمد ہوئی ہے۔

Comments
Loading...