عارف علوی نے صدارتی انتخاب اپنے نام کر کے پاکستان کے تیرھویںویں صدر ہونے کا انتخاب حاصل کر لیا۔

پاکستان صدرمملکت کے انتخاب کے لئے تحریک انصاف کے ڈاکٹر عارف علوی، پیپلزپارٹی کے اعتزاز احسن اور چار اپوزیشن جماعتوں کے مشترکہ امیدوار مولانا فضل الرحمان کے درمیان مقابلہ ہوا تھا۔

عارف علوی نے قومی اسمبلی میں 212 ووٹ حاصل کیے جب کہ مولانا فضل الرحمان نے قومی اسمبلی میں 131 ووٹ حاصل کیے۔

. پاکستان میں منگل کو ہونے والے صدارتی انتخاب کے غیر حتمی نتائج کے مطابق پی ٹی آئی کے امیدوار ڈاکٹر عارف علوی نے کامیابی حاصل کرلی۔

منتخب ہونے والے صدر عارف علوی کا کہنا تھا کہ :
”کامیابی پر اللہ کا شکر ادا کرتا ہوں۔وزیراعظم عمران خان کا مشکور ہوں پاکستان کی بہترین کیلئے ہر ممکن اقدامات کرتا رہوں گا۔عمران خان نے مجھے بڑی ذمہ داری دی۔ میں صرف پاکستان کا نہیں پورے ملک کا صدر ہوں۔ جیت کا تاج تحریک انصاف کے سر جاتا ہے۔ میں اپنے ووٹرز کا بھی شکر گزار ہوں۔”

پارلیمنٹ میں 432 میں سے 424 ووٹ کاسٹ اور 6 ووٹ مسترد ہوئے جبکہ دو ارکان نے اپنا حق رائے دہی استعمال نہیں کیا۔ عارف علوی نے 212، مولانا فضل الرحمان نے 131 اور اعتزاز احسن نے 81 ووٹ حاصل کیے۔ بلوچستان اسمبلی میں عارف علوی نے 46 اور مولانا فضل الرحمان نے 15 ووٹ حاصل کیے۔ اعتزاز احسن کو کوئی ووٹ نہ ملا۔

صدارتی انتخاب کے لیے سندھ، پنجاب اور خیبرپختونخوا اسمبلی کے مجموعی ووٹوں کو بلوچستان اسمبلی کے اراکین سے تقسیم کا فارمولا بنایا گیا۔ صدارتی انتخاب کے لیے چیف الیکشن کمشنر جسٹس ریٹائرڈ سردار محمد رضا ریٹرننگ آفیسر تھے.

Comments
Loading...