بھیس بدل کربھی ٹرینوں کوچیک کروں گا، وزیر ریلوے شیخ رشید کی راولپنڈی میں میڈیا سے گفتگو

شیخ رشید جو کہ پاکستانی سیاست دان اور موجودہ حکومت میں 20 اگست 2018ء کو وزیر ریلوے منتخب ہوئے ہیں۔۔نیشنل اسمبلی آف پاکستان کے ممبر اور عوامی مسلم لیگ کے سربراہ بھی ہیں۔۔

حال ہی میں وزیر ریلوے شیخ رشید نے راولپنڈی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ریلوے کی انتظامیہ اور ان کی پالیسیوں پر اپنے خیالات کا اظہار کیا۔۔

انھوں نے مزید کہا ہے کہ محکمہ ریلوے میں زیرو ٹالرنس کرپشن کی پالیسی پر گامزن ہیں، بڑے بڑے بلڈرز نے محکمہ ریلوے کی زمین پر قبضہ کر لیا ہے۔ جو کہ ہمارے نظام کے لیے قابل قبول نہیں۔۔

وزیر ریلوے کی راولپنڈی اسٹیشن پر میڈیا سے گفتگو میں انھوں نے اپنی اور اس شعبہ سے جڑے کارکنوں کی محنت کو بتاتے ہوئے کہا کے ہم دو ٹرینوں کا افتتاح کرنے جا رہے ہیں جو بیس دن میں تیار کی گئی ہیں۔۔

شیخ رشید نے کہا کہ بہت سی ٹرینیں پرانی اور خراب حالت کی ہو گئیں ہیں، جنہیں اپ گریڈ کرنے کی اشد ضرورت ہے۔ ریلوے ممبران نے عظیم محنت کی مثال قائم کرتے ہوئے 20دن میں 2 ٹرینیں تیار کی، مزدوروں نے دن رات بہت کام کیا ہے، انہیں پانچ پانچ ہزار روپے رقم انعام دیں گے۔۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ ریلوے کو مثالی بنانے کی کوشش کریں گے،ہمیں بہت سے چیلنجز کا سامنا ہے، اپنا سب سے اہم اور بڑا منصوبہ بتایا کہ وہ ریلوے خساروں کو ختم کرنا ہے ۔انھوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے یہ یقین دہانی بھی کروائی کہ ریلوے کو ایک سال کے اندر خسارے سے نکالیں گے۔۔

انہوں نے کہا کہ آج وزیر اعظم عمران خان سے ملاقات میں اپنی سفارشات پیش کریں گے، محکمہ ریلوے کی زمین واگزار کرانے ک۔ لیے آرڈیننس جاری کرنے کی تجویز دوں گا۔وزیر ریلوے نے مزید کہا کہ سی پیک پاکستان کی ریڑھ کی ہڈی ہے، ریلوے کا محکمہ 40سے 42ارب روپے کے خسارے میں ہے، ہمارے پاس وسائل نہیں پھر بھی کام کریں گے۔

ان کی زیر صدارت ٹرینوں میں وائی فائی لگایا جائے گا، 24 گھنٹے پنکھے اور لائٹس بھی میسر ہوں گے‘ بھیس بدل کر گاڑیوں کو چیک کروں گا۔۔

راولپنڈی(سی پی پی) وزیر ریلوے شیخ رشید نے عوام کو 30 دسمبر تک ریلوے کو بہترین بنانے کا اعلان کیا اور اپنے مستقبل کے منصوبوں سے آگاہ کیا۔ کہا ہے کہ ایک سال میں ریلوے کے 42 ملین کا خسارہ ختم کریں گے۔۔ ان کا کہنا ہے کہ ہمارے پاس وسائل نہیں پھر بھی کام کریں گے۔ ہمارا مقصد صرف منافع کمانا نہیں کرپشن پر زیرو ٹالرنس ہوگی۔

راولپنڈی ریلوے اسٹیشن کے دورے کے موقع پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے شیخ رشید کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان نے ہمیں ریلوے کا جو ٹاسک دیا ہے اسے پورا کریں گے اور وعدہ کرتا ہوں بھیس بدل کر گاڑیوں کو چیک کروں گا۔۔۔

سارے پسماندہ علاقوں میں پاکستان ریلوے پہنچے گی۔ جب تک میں وزیر ہوں کسی غریب سے اس کی زمین نہیں چھینی جائے گی۔ بڑے بڑے بلڈرز نے محکمہ ریلو کی زمین پر قبضہ کرلیا ہے۔۔

موہنجو داڑو تک ٹرین لے کر جائیں گے۔ وزیراعظم سے ملاقات میں اپنی سفارشات پیش کرینگے محکمہ ریلوے کی زمین واگزار کرانے کے لئے آرڈیننس جاری کرنے کی تجویز دوں گا۔ ریلوے چالیس سے بیالیس ارب روپے کے خسارے میں ہے جلد نکالیں گے۔ سی پیک میں ریلوے کو ریڑھ ہی ہڈی کی حیثیت حاصل ہے۔۔

شیخ رشید نے کہا کہ ایک دو مچھلیاں سارے تالاب کو خراب کرتی ہیں تاہم کرپشن کے خلاف زیرو ٹالیرنس ہے بڑے بڑے بلڈرز نے محکمہ ریلوے کی زمین پر قبضہ کر لیا ہے۔

وزیر اعظم عمران خان سے ملاقات میں اپنی سفارشات پیش کریں ۔شیخ رشید نے کہا کہ بہت سی ٹرینیں پرانی ہوگئیں، جنہیں اپ گریڈ کرنے کی ضرورت ہے،20دن میں 2 ٹرینیں تیار کی گئی ہیں، ہم موہن جو دڑو تک ٹرین لے کر جائیں گے۔ مزدوروں نے دن رات کام کیا ہے، انہیں پانچ پانچ ہزار انعام دیں گے۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ ریلوے کو مثالی بنانے کی کوشش کریں گے،ہمیں بہت سے چیلنجز کا سامنا ہے۔۔ بس خدا اب ان کی نیک خواہشات کو پورا کریں اور ہر سیاست دان کو اپنے ملک اور اس کے دفاع کے لئیے اچھا سوچنے اور کرنے کی توفیق دیں۔۔ (آمین)

Comments
Loading...