اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے پاکستان سٹیزن پورٹل کا افتتاح کردیا

سٹیزن پورٹل وزیراعظم آفس میں قائم کیا گیا ہے۔ تاکہ عوام براہ راست اپنی شکایات اور مسائل وزیراعظم آفس کو بھجوا سکیں۔۔

جس طرح سے ہمارے نئے وزیراعظم منتخب ہونے کے کچھ عرصے بعد ہی عوام حکومت اور ان کے قانون و ضوابط سے برہم نظر آنے لگی۔۔ اسی کو مد نظر رکھتے ہوئے وزیراعظم نے ایک جدید قسم کا طریقہ عام عوام کی شکایات کو وصول کرنے کے لئے اپنایا۔۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ نیا پاکستان جب بنے گا جب لوگوں کویہ احساس پیدا ہو گا کہ ان کی سنی جا رہی ہے۔۔

پاکستان سیٹیزن پورٹل کے لیے جدید انفارمیشن ٹیکنالوجی کو استعمال کیا جا رہا ہے۔۔ لوگ موبائل ایپ کے ذریعے حکومتی اداروں تک اپنی آواز پہنچا سکیں گے۔۔۔

پورٹل سے 3760 وفاقی اور صوبائی محکمے منسلک کئے جائیں گے اور تمام صوبائی حکومتوں کو شکایات کے ازالے کیلئے احکامات جاری کئے جائیں گے۔۔۔

افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان سیزنل پورٹل پاکستان کے نوجوانوں نے تیار کیا ہے اس نظام سے سزا اور جزا میں آسانی ہوگی۔۔وزیراعظم نے عوامی شکایات براہ راست سننے کیلئے پاکستان سٹیزن پورٹل کا افتتاح کردیا ہے۔۔۔

اب عوام کی شکایات سنیں گے اور ان پر کارروائی کے احکامات بھی جاری کئے جائیں گے۔۔

جو نظام لایا جارہا ہے وہ ذہن بدلنے والا ہے، پہلی مرتبہ سرکاری افسران، وزارتیں اور سیاستدان سب قابل احتساب ہوگئے ہیں۔۔

مزید انکا کہنا تھا کہ جب لوگ کہتے ہیں نیا پاکستان کیا ہوگا، یہ ہے نیا پاکستان، پرانے پاکستان میں غلامانہ مائنڈ سیٹ تھا جس میں باہر سے لوگ حکمرانی کرنے آئے تھے۔۔

عوام اور حکمرانوں کا مختلف تعلق تھا۔۔ لوگ سرکاری دفاتر میں دھکے کھاتےتھے۔۔ اگر پیسہ طاقت ہے تو ناجائز کام بھی ہوجاتے تھے اور کمزوروں کے جائز کام نہیں ہوتے تھے لیکن اب جہاں بھی پاکستانی بیٹھا ہے۔۔ اس کے پاس آواز ہے، ہمیں ایک خاص مدت میں انہیں جواب دینا ہوگا۔۔۔

وزیراعظم آفس کی جانب سے محکموں کو کارروائی کے لیے عوامی شکایات بھیجی جائیں گی اور ان کا حل نکالنے پر غور کیا جائے گا۔۔۔

Comments
Loading...