Present tribute to legend Muhammad Ali (late) with Baaghi tv!

0

Baaghi TV presents tribute to boxing legend Muhammad Ali on this unfortunate occasion of his death. We invite all the Muhammad Ali fans to express their sentiments on their hero’s passing away. All you will have to do is: write your name and comment in the following form and press post.

“A hero never die. boxing will miss you.”- Ali Faraz

“if i die, i am a legend, and legend never die.” – Ali Raza Shaaf

“It isn’t the mounta㏌s ahead to climb that wear you out; it’s the pebble ㏌ your shoe.” ~Muhammad Ali – John Sparks

Love and Respect for the real Legend,who Left us Today, – Miqal khawaja

میں اکھاڑے میں هونے والی جیت کا قائل هوں نه که جنگ میں جیت کا که جس میں صرف صرف قتل کیا جاتا هے.” یه الفاظ اس شخص کے هیں جس نے باکسنگ رنگ میں بڑے بڑے سورماوں کو چاروں شانے چت کیا لیکن جب بات آئی انسانیت کے قتل کی تو اس نے اپنے ملک کا سپاهی بن کر ویت نام کے لوگوں کا قتل کرنے سے صاف انکار کر دیا. اس کے ٹائیٹل واپس لے لئے گئے اور پانچ سال قید کی سزا سنا دی گئی لیکن وه اپنے عزم کا تحفظ ایک مضبوط چٹان کی طرح کرتا رها. اس کا نام اتنا بڑا هوا که هالی وڈ والک آف فیم میں جب اس کا نام درج کیا جانے لگا تو اس نے اپنا نام لکھوانے سے انکار کر دیا. وجه تھی محمد (ص) سے والهانه عقیدت. آج محمد علی وه واحد شخصیت هے جس کا نام والک آف فیم میں نهیں بلکه اس کے ساتھ دیوار پر کنده هے. محمد علی کا باکسر بننا ایک ڈامائی واقعے کا هونا تھا.   سی این این کے مطابق  محمد علی کی عمر جب باره سال تھی اور امریکه میں نسل پرستی اور تعصب اور اس سے هونے والے فسادات اپنے عروج پر تھے، کسی نے ان کی سائیکل چوری کر لی. پولیس آفیسر سےبولا که میں چور کو بهت ماروں گا. پولیس والے نے یه کهه کر جم میں بھیج دیا که پهلے مارنا تو سیکھ لے. سی این این کهتا هے که اس دن کے بعد وه غصه تھا جو ایک باره ساله لڑکے کو اس صدی کا سب سے بڑا انسان بنا گیا. آج امریکه کے لوگ اور میڈیا اس بات کا معترف هے که محمد علی نے جس نظریه کا عملی مظاهره کیا اس کی ستائش لفظوں میں ممکن هی نهیں. آج وه ستاره جو کسی کے قدموں میں نهیں بلکه سبے سب سے اونچا دیوار پر کنده هے اس دنیا سے رخصت هوا تو سب کهه رهےهیں که وه صرف ایک بڑا باکسر هی نهیں ایک عظیم انسان تھا. اتنا ذیاده مجھے محمد علی کے بارے میں علم نهیں تھا لیکن جب آج جب وه دنیا سے رخصت هوئے تو  میں ان کی زندگی سے حاصل هونے والے اسباق کی ایک لسٹ تیار کر رها هوں کیونکه کسی نے مجھ سے بھی کچھ چھینا تھا اور وه چهره میرے دماغ سے نکلتا نهیں. محمد علی میں آج  آپ کو یقین دلاتا هوں که آپ کی سپرٹ اور روح همیشه زنده رهے گی کیونکه آپ هی کها کرتے تھے که انسان تو مر سکتا هے مگر اس کی روح نهیں. سلام اے عظم انسان.

Waqas Zia

Humanity will Miss the Great M Ali – Abu Zar

Muhammad Ali’s life is an inspirational story for the youth and those who have any ambition. – Aisha Sajid Ali

[gravityform id=”3″ title=”false” description=”false”]

Comments

comments

Share.

Leave A Reply